آم کھانے سے پہلے پانی میں کیوں بھگویا جاتا ہے؟ ایسا نہ کرنے کے سنگین نتائج کیا ہیں؟

Why is mango soaked in water before eating? What are the serious consequences of not doing so?

آم کھانے سے پہلے پانی میں کیوں بھگویا جاتا ہے؟ ایسا نہ کرنے کے سنگین نقصانات کیا ہیں؟ آم جسے پھلوں کا بادشاہ بھی کہا جاتا ہے، ایک ایسا پھل ہے جو ہر گھر میں پسند کیا جاتا ہے۔ آپ آم کو کھانے سے پہلے پانی میں کیوں بھگوتے ہیں، آج ہم آپ کو بتائیں گے۔ گرمی کا اثر گرم ہے۔ جن نوجوانوں اور بچوں کو ایکنی یا ہیٹ ریش ہو جاتے ہیں انہیں آم کھانے میں احتیاط کرنی چاہیے یا کم از کم آم کو کھانے سے پہلے پانی میں بھگو دیں تاکہ پھلوں کی گرمی پانی میں نکل جائے۔ پہلی نظر میں آم میں تھرموجنیسیس کی مقدار زیادہ ہوتی ہے جو کہ ہیٹ اسٹروک کے ساتھ ساتھ ہاضمے کے مسائل کا باعث بن سکتی ہے۔ آم کی فصل پر اکثر کیڑے مار ادویات کا سپرے کیا جاتا ہے، اس لیے ضروری ہے کہ آم کو پانی میں بھگو دیں تاکہ کیڑے مار ادویات کا اثر ختم ہو جائے۔ آم کو کم از کم آدھا گھنٹہ اور اگر چاہیں تو ایک سے دو گھنٹے تک بھگو دیں۔

Why is mango soaked in water before eating? What are the serious disadvantages of not doing this? Mango, also called the king of fruits, is a fruit that is loved in every home. Today we will tell you why you soak mangoes in water before eating. The effect of heat is hot. Young people and children who get acne or heat rash should be careful in eating mangoes or at least soak the mangoes in water before eating so that the heat of the fruit is released into the water. At first glance, mangoes are high in thermogenesis, which can lead to heatstroke as well as digestive problems. Mango crops are often sprayed with pesticides, so it is important to soak the mangoes in water so that the effect of the pesticides disappears. Soak the mangoes for at least half an hour and if desired for one to two hours.

اگر آپ کو اس مضمون میں تحریری غلطی نظر آتی ہے تو براہ کرم نیچے کمنٹ کریں۔

آم کھانے سے پہلے پانی میں کیوں بھگویا جاتا ہے؟ ایسا نہ کرنے کے سنگین نتائج کیا ہیں؟
0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
PHP Code Snippets Powered By : XYZScripts.com